110

لاڑکانہ، میڈیکل کی طالبہ نے کی خود کشی—-

لاڑکانہ، میڈیکل کی طالبہ نے کی خود کشی—-

تفصیلات کے مطابق طالبہ کے بھائی ڈاکٹروشال نے میڈیا سے بات کرتے ہوئے کہا کہ نمرتا نے ساڑھے بارہ بجےکالج میں مٹھائی تقسیم کی اور پھر ڈیڑھ گھنٹے بعد اس کی خود کشی کی خبر ملی- طالبہ کےبھائی ڈاکٹروشال نے ڈاکٹر نمرتا کی خودکشی کو قتل قرار دے دیا۔

ڈاکٹروشال کا کہنا تھا کہ یہ قتل ہے- نمرتا ساڑھے بارہ بجےکالج میں مٹھائی تقسیم کررہی تھی، ڈیڑھ گھنٹے میں ایسا کیا ہوگیا کہ اس نے خود کشی کر لی-

ڈاکٹروشال نے اپنی بہن کا پوسٹ مارٹم نجی اسپتال سےکرانےکامطالبہ کیا ہے۔ ڈاکٹر نمرتا بی ڈی ایس فائنل ائیرکی طالبہ تھی- اور اُس نے اپنےکمرے میں پنکھے سے لٹک کرخودکشی کی-

ڈاکٹروشال نے اپنی بہن ڈاکٹرنمرتا کا پوسٹ مارٹم نجی اسپتال سےکرانےکامطالبہ کیا ہے۔

وائس چانسلر نے اس واقعہ کوخود کشی قرار دیتےہوئے کہا کہ وجوہات جاننےکے لیے پرنسپل چانڈکا میڈیکل کالج کی سربراہی میں کمیٹی قائم کردی ہے۔

پولیس نےطالبہ کے کمرے کو سیل کر کے تحقیقات شروع کردی ہے۔دوسری جانب نمرتا کی لاش میرپور ماتھیلو منتقل کر دی گئی ہے، نمرتا کی آخری رسومات میرپورماتھیلو میں ادا کی جائیں گی۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں