103

سعودی عرب پر حملہ اور کہاں گیا سالانہ ٧٠ بلین ڈالرز ڈیفنس بجٹ–

سعودی عرب پر حملہ اور کہاں گیا سالانہ ٧٠ بلین ڈالرز ڈیفنس بجٹ–

سعودی عرب اس وقت دنیا میں تیسرے نمبر پر ڈیفنس بجٹ پر خرچ کرتا ہے- اس کا سالانہ ٧٠ بلین ڈالرز ڈیفنس بجٹ ہے اور وہ امریکا کے ٹاپ اسلحہ ٹیکنالوجی کو امپورٹ کرتا ہے- یمن لڑائی میں جب ایک ڈرون اٹیک ہوا اور سعودی عرب کی دنیا کو آدھی تیل سپلائی رک گئی- اس حملے سے تیل کی قیمت میں ١٠ ڈالر فی بیرل اضافہ ہوا-

امریکا نے ایران پر اس حملے کا الزام لگایا اور سعودی عرب نے بھی اسکی بات پر یقین کر لیا- مگر بغیر کسی ثبوت کے یہ الزام لگایا گیا- اب سوال یہ پیدا ہوتا ہے کہ جو ملک ٧٠ بلین ڈالر بجٹ پر خرچ کرتا ہو اور اور ڈرون اٹیک کا پتا نہ چلا سکا تو یہ تو بڑے شرم کی بات ہے یا تو امریکن ٹیکنالوجی ہی فیل ہو گئی یا پھر یہ حملہ ایران نے نہیں بلکہ یمن کی طرف سے ہوا اور اگر کل کو اس ملک پر کوئی بڑا حملہ ہو جاۓ تو سعودی عرب کا کیا بنے گا-

جہاں تک دیکھنے میں آتا ہے یہ صرف ایران کو گھیرا دنے کے لئے کیا گیا ہے- یا پھر سعودی عرب روس سے ٹیکنالوجی کو استمال کرے امریکن ٹیکنالوجی یہاں فیل ہو چکی ہے –

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں