ghaza_attack 228

‘دنیا خاموش ہے’ – اسکول پر اسرائیلی گولہ باری سے کم از کم 15 افراد ہلاک۔

اقوام متحدہ کے عہدیداروں نے سوئے ہوئے بچوں کی ہلاکت کو دنیا کی بدنامی قرار دیا اور بدھ کے روز غزہ میں ایک اسکول فلسطینی خاندانوں کو پناہ دینے کے لئے استعمال کیے جانے کے بعد اسرائیل کو بین الاقوامی قوانین کی شدید خلاف ورزی کا الزام لگایا۔

غزہ بھر میں ایک رات کے دوران لگاتار بمباری کے دوران جبالیہ پناہ گزین کیمپ کے اسکول میں پانچ گولوں کی زد میں آکر کم سے کم 15 افراد ہلاک ہوگئے ، جن میں زیادہ تر بچے اور خواتین تھیں۔ 100 سے زیادہ افراد زخمی ہوئے۔

اقوام متحدہ کے سکریٹری جنرل بان کی مون نے کہا کہ یہ حملہ “اشتعال انگیز اور بلاجواز” تھا اور انہوں نے “احتساب اور انصاف” کا مطالبہ کیا تھا۔ اقوام متحدہ نے کہا کہ اس کے عہدیداروں نے بار بار اسرائیل کو اسکول اور اس کی مہاجرین کی آبادی کی تفصیلات دی ہیں۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں